یہ ہے رہزنوں اور رہبر میں فرق




ہمیں آرمی کے بڑے جنرلوں کے ساتھ شکوہ اور شکایت تو ہو سکتے ہیں مگر آرمی بطور ادارہ اور میدان عمل میں مصروف فوجیوں سے ہر گز بغض اور نفرت نہیں ہو سکتی . ہم نے دیکھا کے انڈیا والوں کے فوجی ہلاک ہوے تو پورا انڈیا اپنی فوج کے پیچھے سیسہ پلائی دیوار بن گیا ، پاکستان میں ہمارے فوجی شہید ہوتے ہیں تو حزب مخالف کے سیاستدان بغض کی وجہ سے کوئی ردعمل ظاہر نہیں کرتے جو ایک نہایت بھیانک اور خوفناک عمل ہے جو ہمیں بہت کچھ سوچنے پر مجبور کرتا ہے . یہ کیسی سیاست ہے اور یہ کیسے سیاسی خاندان کے خانوادے ہیں ؟

بدقسمتی سے لوگوں میں بھی احساس ختم ہی چکا ہے یہ بہت بڑا لمحہ فکریہ ہے . اللہ اس قوم پر رحم کرے





کیا مریم نواز شریف اوربلاول کو ہمارے فوجیوں کے شہید ہونے کا کوئی دکھ نہیں ہوتا ، کیا انہوں نے دکھ کا اظہار کبھی کیا ؟